وزیراعظم عمران خان کا نیا روپ ،فوجی عمل دخل میں اضافے کا امکان

مئی کے مہینے کا آغاز ہوچکا ہے، اسی ماہ میں رمضان المبارک کی سعادتیں بھی حاصل ہورہی ہیں، قران شمس و قمر اس ماہ کی پانچ تاریخ کو 03:45 am پر پاکستان اسٹینڈرڈ ٹائم کے مطابق ہوگا، گویا 6 مئی کی شام رویت ہلال کا امکان کم ہے، البتہ مغربی ممالک ، مڈل ایسٹ اور سعودیہ عرب وغیرہ میں چاند 6 مئی کو نظر آسکتا ہے، چناں چہ پاکستان میں یکم رمضان المبارک 7 مئی کو ممکن ہوگی، یہ الگ بات ہے کہ حسب سابق کے پی کے میں چاند نظر آجائے اور تمام سائنسی اصول دھرے رہ جائیں ، اکثر ایسا ہوتا رہا ہے۔
رمضان المبارک تزکیہ نفس یعنی روحانی آلودگیوں سے نجات کا مہینہ ہے، اس مہینے کی اہم عبادات میں روزہ ایک ایسی عبادت ہے جو اللہ کو بہت محبوب ہے، اس کا اجر فوری ملتا ہے، اس ماہ میں دیگر عبادات بھی قبولیت کا اعلیٰ درجہ رکھتی ہیں، چناں چہ ہر سال کی طرح اس سال بھی ہم رمضان المبارک سے متعلق ضروری عملیات و وظائف دے رہے ہیں اور امید کرتے ہیں کہ جو لوگ ان وظائف پر عمل کریں گے، ان شاءاللہ یقینی نتائج دیکھیں گے، اسی مہینے میں سیارہ زہرہ اور مشتری کے درمیان تثلیث کا زاویہ بھی قائم ہورہا ہے، یہ بھی ایک نہایت سعد اور مبارک نظر ہے، اس وقت میں ماہرین جفر خوش بختی ، کشادگی ءرزق اور دو افراد کے درمیان محبت و اخوت کے لیے نقوش تیار کرتے ہیں، ضرورت مند اس وقت سے بھی فائدہ اٹھاسکتے ہیں، وقت کی درست نشاندگی کی جارہی ہے۔

تثلیث زہرہ اور مشتری

زہرہ اور مشتری کے درمیان تثلیث کے سعد زاویے کی ابتدا9 مئی کو 03:25 am پر ہوگی، یہ نظر 9 مئی کو رات 09:55 pm پر مکمل ہوگی، اس کا خاتمہ 10 مئی شام 04:23 پر ہوگا، اس وقت میں زہرہ اور مشتری کی ساعتیں کارآمد ہوں گی، قمر منزل سعد میں عروج ماہ کا ہوگا، چناں چہ الواح و طلسم کے لیے نہایت مناسب وقت ہوگا، زہرہ اور مشتری کے ضروری عملیات و نقوش کے لیے ہماری کتاب مسیحا یا ہماری ویب سائٹ www.maseeha.com سے مدد لی جاسکتی ہے یا براہ راست رابطہ کرکے مشورہ کیا جاسکتا ہے۔

عمران خان کے بدلتے تیور

ہمارے قارئین کو یاد ہوگا کہ جب ہم نے عمران خان کے زائچہ ءحلف سے متعلق اپنا تجزیہ پیش کیا تھا تو عرض کیا تھا کہ 20 دسمبر سے 23 فروری تک کا وقت زیادہ سخت اور مشکل ہوگا اور ایسا ہی ہوا، نئی حکومت کو ابتدا ہی سے جو مشکلات اور چیلنج درپیش تھے ان میں وقت کے ساتھ ساتھ اضافہ ہی ہوا ہے اور بہت جلد عوامی رائے مایوسی کا شکار ہوئی، یہ صورت حال بدستور جاری ہے لیکن اس کے ساتھ ساتھ اپوزیشن کا بھی حال کچھ اچھا نظر نہیں آتا، عوام مہنگائی کے دباو¿ سے چیخ رہے ہےں، ضروریات زندگی عام افراد کی دسترس سے دور ہوتی جارہی ہیں، پارلیمنٹ بے معنی ہوکر رہ گئی ہے، ملک کی دو بڑی سیاسی پارٹیاں ن لیگ اور پیپلز پارٹی احتسابی عمل کے باعث اپنی بقا کی جنگ لڑ رہی ہیں ، ان کی اعلیٰ قیادتیں عدالتوں کے چکر لگارہی ہیں۔
زائچہ ءحلف کے بارے میں تجزیہ کرتے ہوئے ہم نے عرض کیا تھا کہ 7 مئی 2019 ءسے زائچے میں سیارہ مریخ کا دور اصغر شروع ہوگا جو 12 اپریل 2020 ءتک جاری رہے گا، زائچے میں سیارہ مریخ شرف یافتہ اور نہایت طاقت ور پوزیشن میں ہے، رچاکا یوگ بنارہا ہے، سیارہ مریخ بنیادی طور پر فوج اور ملٹری اسٹیبلشمنٹ کا نمائندہ ہے، ٹیکنیکل امور بھی سیارہ مریخ کے دائرئہ اختیار میں ہےں، ہم نے عرض کیا تھا کہ مریخ کا دور شروع ہوگا تو وزیراعظم کا ایک نیا اور زیادہ سخت روپ سامنے آئے گا، رچاکا یوگ زیادہ حاکمانہ بلکہ آمرانہ طور طریقوں کی نشان دہی کرتا ہے، چناں چہ امکان یہی ہے کہ وزیراعظم عمران خان کا رویہ اور طور طریقے زیادہ سخت اور بے لچک ہوسکتے ہیں، ہم اس امکان کا بھی اظہار کرچکے ہیں کہ وہ کسی مرحلے پر اسمبلیاں توڑ کر کوئی نیا سیٹ اپ تشکیل دینے کی کوشش کرسکتے ہیں، حال ہی میں انھوں نے اپنی کابینہ کے بہت سے لوگوں کو فارغ کردیا ہے یا ان کی وزارتیں تبدیل کردی ہیں اور ان کی جگہ ٹیکنوکریٹس کو موقع دیا ہے، اپنے ایک بیان میں انھوںنے یہ بھی کہا کہ جو کام نہیں کرے گا وہ گھر جائے گا، اس کا عملی مظاہرہ آئندہ اور بھی کھل کر اور سخت انداز میں سامنے آسکتا ہے، شاید ملکی حالات میں بہتری لانے کے لیے اس نوعیت کی سختیاں اور دو ٹوک فیصلے بہتر ثابت ہوں اور ملک ترقی کے راستے پر گامزن ہوسکے۔
سیارہ مریخ کا دور اصغر اور رچاکا یوگ کا اثر فوجی اثرورسوخ کی زیادتی لاتا ہے، گویا سیاست کی بساط پر نئی چالیں اور نئی حکمت عملی نمایاں ہونے کا وقت آگیا ہے، خود عمران خان کی پوزیشن اس نئے سیٹ اپ میں کتنی مو¿ثر ہوگی؟ یہ بھی غور طلب مسئلہ ہے، امکان یہی ہے کہ وہ اپنی پوزیشن کو مزید مضبوط اور مستحکم بنائیںگے اور صورت حال خواہ کچھ بھی ہو ، اپنے مو¿قف سے پیچھے نہیں ہٹیں گے، جولائی کے مہینے میں سورج اور چاند گہن نہایت اہمیت کے حامل ہیں، اس لیے جولائی کو اگر مزید بنیادی تبدیلیوں اور اکھاڑ پچھاڑ کا مہینہ کہا جائے تو غلط نہیں ہوگا (واللہ اعلم بالصواب)

وسعت و برکتِ رزق

اگر رزق میں برکت اور اضافہ نہیں ہے جو کچھ کماتے ہیں ، سب ختم ہوجاتا ہے بلکہ مہینے کے آخر میں اُدھار مانگنے کی نوبت آجاتی ہے، ہاتھ میں پیسہ نہیں رُکتا تو اس کے لیے ایک مجرب وظیفہ دیا جارہا ہے اس پر عمل کریں ، انشاءاللہ خیروبرکت بھی ہوگی اور رزق میں اضافہ بھی ہوگا۔
سب سے پہلے اپنے نام کے اعداد معلوم کریں اور پھر نوچندے اتوار ، پیر ، جمعرات یا جمعہ سے روزانہ عشاءکی نماز کے بعد یہ وظیفہ اول آخر درود شریف کے ساتھ شروع کریں اور بہتر یہ ہوگا کہ اسے کبھی ترک نہ کریں یعنی ہمیشہ پڑھتے رہیں۔
یَا وَاسِعُ وُس±عَتِی
اب ایک مثال کے ذریعے اس عمل کی مزید وضاحت کی جارہی ہے مثلاً کسی کا نام محمد عادل ہے اور ماں کا نام فاطمہ ہے تو نام اور والدہ کے نام کے اعداد ابجد قمری سے نکالیں جو یہ ہوں گے۔
م ح م د ع ا د ل ف ا ط م ہ
40+8+40+4+70+1+4+30+80+1+9+40+5=332
پس معلوم ہوا کہ محمد عادل بنت فاطمہ کے کل اعداد 332 ہوئے لہٰذا روزانہ اول آخر گیارہ بار درود شریف کے ساتھ 332 مرتبہ مندرجہ بالا اسمائے الٰہی کا ورد کرکے اللہ سے دعا کیا کریں‘ عام لوگوں کو نام کے اعداد نکالنے کے لیے حروف تہجی کے اعداد معلوم نہیں ہوتے، گزشتہ کالموں میں ابجد قمری کا چارٹ شائع ہوچکا ہے اور اب ہماری ویب سائٹ (www. maseeha.com) پر بھی دیکھاجاسکتا ہے۔

عمل حل المشکلات

چاند رات کو عشاءکے بعد یا نیا چاند ہونے کے بعد کسی بھی نوچندے اتوار، پیر، جمعرات یا جمعہ سے دو رکعت نماز نفل برائے حاجت پڑھیں اور نفل کی ادائیگی کے بعد اپنی کسی بھی جائز حاجت کے لیے دعا کریں مثلاً شادی‘ مقدمہ میں کامیابی‘ قرض کی ادائیگی‘ رہائش سے متعلق پریشانی‘ کاروباری بندش ‘جاب کا حصول‘ دشمنوں کے شر سے نجات‘امیگریشن کے مسائل، الغرض کوئی بھی جائز مقصد ہو اسے ذہن میں رکھ کر دعا کی جائے اور اس عمل میں کوئی ناغہ نہ ہونے پائے‘ صرف خواتین کو خاص دنوں میں ناغہ کا حق حاصل ہے۔
گیارہ بار درود شریف اول و آخر کے ساتھ مندرجہ ذیل وظیفہ 473 مرتبہ پڑھیں اور پھر عاجزی اور انکساری کے ساتھ اللّٰہ سے اپنی مشکل کے حل کے لیے دعا کریں‘ وظیفہ یہ ہے۔
کٓھٰیٰعٓصٓ کِفَایَتنَا – حٓمٓعٓسٓقٓ حِمَایَتنَا
اس وظیفے کو رمضان کی ستائیسویں شب تک جاری رکھیں اور پھر ستائیسویں شب جس قدر بھی گڑگڑا کر، آہ و زاری کے ساتھ دعا کر سکتے ہیں، کریں اور دوسرے دن حسب توفیق غریبوں میں صدقہ و خیرات کریں۔ انشاءاللّٰہ مشکل سے مشکل اور خواہ کتنا ہی تکلیف دہ مسئلہ ہو، ضرور حل ہو جائے گا۔

عمل سورة القدر

سورہ¿ قدر کا اس ماہ مبارک سے خصوصی تعلق ہے اور خصوصاً اس ماہ کے آخری عشرے کی طاق راتوں سے۔ اگر رمضان المبارک میں روزانہ 113 مرتبہ اس کی تلاوت کی جائے تو قلب و روح میں پاکیزگی پیدا ہوتی ہے اور خیالات فاسدہ سے نجات ملتی ہے، منفی سوچوں سے نجات اور نفسیاتی امراض سے چھٹکارا ملتا ہے۔
وہم، بدگمانی، مالیخولیا (Mood Disorder) ، خفقان، مراق، ہسٹیریا، شیزوفزینیا اور اس کے علاوہ سحر و جادو، جنات و آسیب وغیرہ کے مریضوں کو بھی اس سے فائدہ ہوتا ہے۔ اس سورة مبارکہ سے ایسے مریضوںکے علاج کا طریقہ یہ ہے۔
کوئی بھی خوشبودار پھول سفید رنگ کا لیں مثلاً چنبیلی، موتیا وغیرہ۔ پھول کا خوشبودار ہونا شرط ہے۔ سورة قدر کو 13 مرتبہ پڑھ کر پھول پر دم کریں اور مریض کو سنگھا دیں اور جب تک پھول میں خوشبو رہے وقتاً فوقتاً سنگھاتے رہیں۔ دوسرے دن پھر دوسرا تازہ پھول لے لیں اور اس پر حسب سابق دم کر کے سنگھاتے رہیں۔ 40 دن تک یہ عمل کریں انشاءاﷲ مرض جاتا رہے گا۔

دوسرا طریقہ

دوسرا طریقہ یہ ہے کہ عمدہ قسم کا چنبیلی یا زیتون کا تیل لے لیں اور رمضان کے آخری عشرے کی طاق راتوں میں عشاءکی نماز کے بعد 40 بار سورہ القدر پڑھ کر تیل پر دم کرتے رہیں۔ آخری طاق رات کے بعد یہ تیل استعمال کے لیے تیار ہو گا۔ اس تیل کی مالش مریض کے سر میں کریں۔ روزانہ کسی ایک ٹائم تھوڑا سا تیل سر میں ڈال کر اچھی طرح مالش کر دیا کریں۔ اگر مرض نہایت سخت ہے اور بیس پچیس دن یا اس سے زیادہ عرصے میں بھی مکمل شفایابی نہیں ہو رہی لیکن افاقہ نظر آ رہا ہے اور بوتل میں تیل ختم ہونے لگے تو بچے ہوئے تھوڑے سے تیل میں چنبیلی یا زیتون کا مزید تیل ڈال کر بوتل پھر بھر لیں اور اس طرح پڑھے ہوئے تیل کو ختم نہ ہونے دیں۔ انشاءاﷲ مکمل شفا ہو گی۔

قید و بند سے رھائی

اس مجرب وظیفے کو بیان کرنے کی ضرورت اس لیے محسوس ہو رہی ہے کہ اکثر لوگ بذریعہ فون کسی ناگہانی کیس میں پھسنے اور حوالات یا جیل میں بند ہونے کے بارے میں بتاتے رہتے ہیں۔ یہ درست ہے کہ ایسے تمام معاملات میں سب سے پہلے مادی طور طریقوں سے ہی مدد لینی چاہیے اور قانونی معاملات کو قانونی طریقوں سے ہی حل کرنا چاہیے لیکن جو لوگ بے قصور ہیں یا دانستہ یا نادانستہ کسی غلطی کے مرتکب ہو کر قید و بند کی مصیبت کا شکار ہوئے ہوں ، ان کے لیے بہترین وظیفہ ہمارے تجربے کے مطابق یہی ہے کہ وہ بلا تعداد چلتے پھرتے اٹھتے بیٹھتے وضو بے وضو آیتہ الکریمہ کا ورد اگلی آیت تک کریں یعنی “لا الہ الا انت سبحانک” سے اگلی آیت کے اختتام “وکذالک ننجل مومنین” (سورہ الانبیائ) تک پڑھیں، انشاءاللّٰہ جلد قید سے رہائی کے لیے کوئی ذریعہ پیدا ہو جائے گا ۔ اگر اس دوران میں ہفتے کے دن پرندوں کو آزاد کرنے کا صدقہ بھی دیتے رہیں تو بہترین بات ہو گی ۔

برائے ترک عاداتِ بد

بچوں کی یا کسی بھی چھوٹے بڑے کی کوئی بری عادت چھڑانے کے لیے ایک نہایت آسان عمل ہم لکھ رہے ہیں ، رمضان المبارک کے پہلے جمعہ کو بعد نماز جمعہ 100 مرتبہ اسمِ الٰہی ”اَلتَوَّاب“اول آخر سات مرتبہ درود شریف کے ساتھ پڑھ کر پانی پر دم کریں اور یہ پانی پلادیں، یہ عمل روزانہ 21 دن تک کریں، انشاءاللہ کوئی بھی بری عادت ہو وہ ختم ہوجائے گی۔

دعائے امان

ایسے لوگ جو کسی بھی نوعیت کی سختی کا شکار ہوں۔ گردش سیارگان یعنی وقت کی خرابی چل رہی ہو۔ سیارہ زحل کی نحوست کا شکار ہوں یا سالانہ زائچہ نحس اثرات سال بھر کے لیے ظاہر کرتا ہو اور خصوصاً ان کے کاموں میں رکاوٹیں اور مشکلات پیدا ہو رہی ہوں یا نقصانات اور حادثات سے واسطہ پڑ رہا ہو، انہیں “دعائے امان” کو مستقل اپنے ورد میں رکھنا چاہیے اور اس کا طریقہ یہ ہے کہ ہر روز صبح گھر سے نکلنے سے پہلے 7 بار، 9 بار یا 11 بار اس چھوٹی سی دعا کو پڑھ لیا کریں اور اپنے سینے پر دم کر لیا کریں پھر دونوں ہاتھوں پر دم کر کے چہرے پر پھیر لیا کریں‘ دعائے امان یہ ہے۔
بِسمِ اللّٰہِ الاعظمِِِ الذی لا یَضُّرُ مَع اِسمہِ شیً فی الارضِ ولا فی السَمائِ وَ ھُو السَّمیعُ العلیم
اگر مشکلات اور نحوست کچھ زیادہ ہی چل رہی ہو تو اس سے نجات کے لیے اس دعا کو اپنے نام اور والدہ کے نام کے اعداد کے مطابق روزانہ پڑھیں اور اگر وظیفے کے طور پر اس کا آغاز کرنا ہو تو پھر نو چندے ہفتے سے شروع کریں اور 9 دن، 18 دن، 27 دن یا 90 دن تک پڑھیں۔ نو چندہ ہفتہ وہ ہو گا جو چاند کی 3 تاریخ کے بعد پہلا ہفتہ ہو گا۔ اگر اس مبارک مہینے میں کوئی شروع کرنا چاہے تو کسی بھی ہفتے سے شروع کر سکتا ہے۔
اپنے نام اور والدہ کے نام کے اعداد نکالنے کا طریقہ مع ابجدِ قمری پہلے دیا گیا ہے۔

سخت دل شوہر یا بیوی

اکثر خواتین یا بعض مرد یہ شکایت کرتے ہیں کہ اُن کا شوہر یا بیوی نہایت سخت دل اور بے پروا ہے،خاص طور پر یہ شکایت خواتین کو ہوتی ہے کہ شوہر محبت نہیں کرتا، خیال نہیں رکھتا، مالی طور پر پریشان کرتا ہے یا مارپیٹ کرتا ہے، بچوں کی ضروریات بھی پوری نہیں کرتا وغیرہ وغیرہ، بعض کیسوں میں خواتین عادتاً بھی اس شکایت کا اظہار کرتی رہتی ہے،حالاں کہ حقیقتاً ان کی یہ شکایت جائز نہیں ہوتی۔
اس مسئلے کے حل کے لیے ایک نہایت آسان وظیفہ دیا جارہا ہے،رمضان کے پہلے جمعہ کو صبح طلوعِ آفتاب کے وقت پانی کی ایک بوتل پر پوری سورئہ یٰس پڑھ کر دم کردیں،یہ کام روزانہ 21 دن تک کریں،یعنی پہلے جمعہ سے شروع کریں اور 21 دن پورے کریں،اگر درمیان میں ناغہ کے دن آجائیں تو وظیفہ چھوڑ دیں اور بعد میں 21 دن پورے کریں،اس کے بعد یہ پانی روزانہ تھوڑا تھوڑا خاوند کو پلانا شروع کردیں،پانی تھوڑا سا رہ جائے تو مزید پانی ڈال کر بوتل دوبارہ بھر لیں،انشاءاللہ اس کا دل نرم ہوجائے گا اور گھر اور بچوں سے محبت پیدا ہوجائے گی،آپ کا خیال رکھے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں